Artical

یاداشت کمزور کیوں ہوتی ہے،جانئیے وہ بات جو آج تک کسی کومعلوم نہ تھی

Written by admin

دماغ اﷲ تعالیٰ کی ایک بہترین تخلیق ہے۔ اور انسان کے لئے انمول تحفہ خداوندی ہے۔ انسان اپنے دماغ کو استعمال کرکے نت نئے اور حیرت انگیز کارنامے انجام دے رہا ہے۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ باقی اعضاء کی طرح اس کا بھی خیال رکھا جائے۔ کیونکہ انسان کی عمر جیسے جیسے بڑھتی جاتی ہے۔اس کی یاداشت بھی کمزور ہوتی چلی جاتی ہے۔ ہم یہاں چند ایسی عجیب و غریب چیزوں یا عوامل کا ذکر کرنے جارہے ہیں۔

جو جو آپ کو یادداشت سے محروم کرسکتی ہیں۔ یا پھر آپ کو ایسی دماغی بیماریوں کا شکار بناتی ہیں جو آپ کی یادداشت کو شدید متاثر کرتی ہیں۔ اور آپ باتیں بھولنے لگ جاتے ہیں۔ فضائی آلودگی ماہرین کے مطابق بہت زیادہ فضائی آلودگی سے متاثرہ علاقوں میں رہنے والے افراد میں صاف آب وہ ہوا کے علاقے میں رہائش پذیر افراد کے مقابلے میں یادداشت کی کمزوری کا مرض لاحق ہونے کا خطرہ 92 فیصد زیادہ ہوتا ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ فضا میں موجود چند باریک اور خطرناک ذرات سانس کے ذریعے آپ کے پھیھپڑوں میں پہنچ جاتے ہیں اوروقت کے ساتھ ساتھ آپ کو یادداشت کو کمزور بنانے لگتے ہیں۔ خراب نیند کیا جانتے ہیں کہ ایک رات اچھی نیند سے محروم ہونا آپ کے دماغ کو دھندلا دیتا ہے۔ جبکہ ماہرین کا یہ بھی کہنا ہے کہ بہت زیادہ خراب نیند دماغ میں ایسے پروٹین کو جنم دینے لگتی ہے۔ جو الزائمر کی بیماری سے تعلق رکھتے ہیں۔

یاداشت کیوں کمزور ہوتی ہے؟ امام علی کی خدمت میں ایک شخص آ کر پوچھنے لگا یا علی! میں باتوں کو بھول جاتا ہوں اور دن بدن میرا دماغ کمزور ہوتا جارہا ہے۔ تو امام علی نے فرمایا : اے بندہ خدا تمہارا چہرہ بتا رہا ہے کہ تم گرم گرم کھانا جلدی جلدی کھاتے ہو۔یاد رکھنا جو انسان گرم گرم کھانا جلدی جلدی میں کھاتا ہے۔ اس کا دماغ کمزور اور جسمانی بیماریاں وجود پہ اختیار رکھتی ہیں۔اور یوں وہ باتوں کو بھولنا شروع ہو جاتا ہے۔ تو وہ پوچھنے لگا یا علی میں کس طرح سے کھانا کھاؤں جس سے میرے دماغ اور جسم کو فائدہ ملے؟

امام علی نے فرمایا کھانا کھانے سے پہلے اللہ کا نام لے کر کھایا کرو ۔ کھانا بیٹھ کر کھایا کرو ۔ سیدھے ہاتھ سے کھایا کرو ۔کھانا ٹھنڈا کر کے چھوٹے چھوٹے نوالے توڑ کر منہ میں ڈالا کرو۔اور خوب چبھایا کرو اور کھانے کے فورا بعد پیٹ بھر کر پانی نا پیا کرو ۔یاد رکھنا اللہ نے رزق میں شفا،برکت اور رحمت کو پوشیدہ کیا ۔جو انسان صحیح طرح سے کھانا کھاتا ہے۔ اور کھانا کھانے کے بعد اللہ کا شکر کرتا ہے۔ تو وہ کھانا اس کے جسم کے لیے شفا بھی بن جاتا ہے۔ دوا بھی بن جاتا ہے ۔اور برکت اور رحمت بھی بن جاتا ہے۔

 

Leave a Comment