Artical

ریشہ کی کپکپاہٹ کا مکمل بہترین علاج ،ہاتھوں کا ریشہ ،سر کا ریشہ اور جسم کے ریشے کو دور کریں

Written by admin

رعشہ کا بہترین علاج یہ ہے کہ ہم اپنا خ ون ہے اسکو گاڑھا نہیں ہونے دینا اورخ ون کو گاڑھے کرنے کے جو مین چیزیں وہ آپ کے سلور کے برتن ، آپ کے سٹیل کے برتن ہیں ۔ سٹیل کے برتن میں کھانا پکانا او ر پلاسٹک کے برتن میں رکھنا ۔پانی کو سلور کے برتن میں اور پلاسٹ کی بوتل میں ٹھنڈا کرنا یہ سب سے زیادہ خ ون کو گاڑھا کرتا ہےاس کے ساتھ آپ کا ٹھنڈا پانی ہے

آپ کے فریج کے اندر جو گیس اس کی وجہ سے خ ون گاڑھا ہوتا ہے ۔وہ کوکنگ آئل جو آپکے جسم میں جاکر جمتے ہیں اس سے خ ون گاڑھا ہوتا ہے ۔آپکا آئیوڈائیز نمک اس سے آپکا خ ون گاڑھا ہوتا ہے آپ کا وہ آٹا جو پتھر کی چکی سے پسا ہے ا س سے آپکا خ ون گاڑھا ہوتا ہے ۔اور آپکا وہ پانی جو منرل لیس ہے جس کو منرل واٹر کے نام پر جانتے ہیں اس سے خ ون گاڑھا ہوتا ہے ۔ خ ون کو پتلا کرنے کی جو بہترین دوائی وہ ادرک لہسن پودینہ اور آنار دانا ہے ۔

اس کی چٹنی بناؤحسب ذائقہ اس میں سبز مرچ ملاؤ ہر کھانے کے بعد اس کو استعمال کرو آپ اس کے ساتھ بہترین دوائی جس کو پیار ے پیغمبرﷺ نے فرمایا جس میں ہر بیماری کی شفاء ہے وہ کلونجی اور میتھی دانہ ہ جس کے بارے میں روایت میں آتا ہے کہ لوگوں کو پتہ چل جائے کہ اس کے کتنے فائدہ ہیں تواسے سونے کے عیوض خریدیں ۔ کلونجی او رمیتھی دانہ دونوں کو برابر مقدار میں لیں گے اس کو رات کو بھگوئیں گے اسمیں لیمن ملائیں گے زیتون کا تیل ملائیں گے اور ذرا سا گڑ ملائیں گے ۔

اس کو اُبال کر رکھیں گے صبح ناشتے سے آدھا گھنٹہ پہلے پئیں گے ۔ صبح کو اُبال کر رکھیں گے دوپہر کے کھانے سے آدھا گھنٹہ پہلے پئیں گے ۔اسی طرح دوپہر پانچ پھل لیں گے انکا جو س نکالیں گے ۔جیسے گاجر کا جوس نکالتے جوسر اس کا فائبر علیحدہ ہوا ہے اس کو دوبارہ پھر جوس میں شامل کرکے وہ پلائیں گے یہ کام اگر کرلیئے ۔ایک چیز سب سے زیادہ جس سے دور رہنا وہ برائلر چکن ہے اور وہ دودھ جن کو بھینسوں انجکشن لگتے ہیں

اس دودھ سے پرہیز کریں گے ۔کھانے میں آپ مچھلی لے سکتے ہیں اور دیسی مرغی استعمال کرسکتے ہی لیکن برائلر سے آپ نے پرہیز کرنی ہے کیونکہ یہ خ ون کو گاڑھا کرتی ہے۔رعشہ کی کمزور کر دینے والی بیماری ہمارے جسم کی حرکات و سکنات کو برے طریقے سے متاثر کرتی ہے۔

یہ ہمارے دماغ کے خلیے-جنہیں نیورون کہتے ہیں-کی توڑپھوڑ کی وجہ سے ہوتی ہے۔ علامات میں ہاتھوں کی کپکپاہٹ جسم کی حرکات کی صلاحیت میں حد درجہ کمی بولنے اور لکھنے کی صلاحیت میں کمی قابل ذکر ہیں۔ چلنا پھرنا لکھنا اور روز مرہ زندگی کے بقیا کام آہستہ آہستہ ختم ہونے لگتے ہیں۔ نیورون کی خرابی کی وجہ سے ایک اہم کمپاؤنڈ جسے ڈوپامین کہتے ہیں کی کمی واقع ہو جاتی ہے جو ان علامات کا باعث بنتی ہے۔ آہستہ آہستہ یہ کمپاؤنڈ اس قدر کم ہو جاتا ہے کہ روز مرہ زندگی کے تقریبا سارے کام ہی مشکل ہو جاتے ہیں۔اللہ ہم سب کا حامی وناصر ہو۔آمین

Leave a Comment